جموں وکشمیرمالی بحران کاشکار:سروڑی

0
67

سگدی؍مغلمیدان؍؍جموں وکشمیرپردیش کانگریس کمیٹی کے نائب صدر ورکن اسمبلی اندروال غلام محمد سروڑی نے آج اسمبلی حلقہ کے مختلف علاقوں کا تفصیلی دورہ کیا۔دورے کے دوران اُنہوں نے بھاٹا، گوواریاں، سگدی، مولچیتر ومغل میدان علاقوں میں عوامی وفودکوسنا۔رکن اسمبلی کواس موقع پرسگدی ومغل میدان کے لوگوں نے بتایاکہ محکمہ بجلی کی کارکردگی یہاں صفرہے، انتہائی خستہ حال بجلی لائن اور بوسیدہ کھمبے ہیں جو ہر وقت خطرات کودعوت دیتے رہتے ہیں اور مقامی آبادی خوفزدہ رہتی ہے۔لوگوں نے ان کے بدلائو کی مانگ کے علاوہ سگدی سڑک پرتال کول بچھانے اور سگدی میں واٹرسپلائی اسکیموں کی منظوری، سگدی کے مختلف اسکولوں میں عملے کی قلت کودورکرنے، راشن کی معقول سپلائی یقینی بنانے اور منریگاو آئی ایچ ایچ ایل کے بقایاجات کی ادائیگی کی مانگ کی۔اس موقع پرخطاب کرتے ہوئے سروڑی نے تشویش ظاہرکی کہ ریاست مالی بحران کاشکار ہے ، حکومت دیہی علاقہ جات میں بنیادی سہولیات زندگی میسرکرانے میں ناکام ثابت ہورہی ہے۔اُنہوں نے کہاکہ پی ڈی پی۔بھاجپادورِ حکومت ریاست جموں وکشمیرکو ہنگامی حالات سے دوچارکرنے کے درپہ ہے۔سروڑی نے کہاکہ مختلف تعمیراتی ایجنسیوں نے2015سے مختلف ترقیاتی منصوبے چلائے اورپایۂ تکمیل کوپہنچائے لیکن انہیں رقومات واگذارنہیں کرائی جارہی ہیں۔ سروڑی نے کہاکہ آمدن وخرچ میں تضادہے جس کی وجہ سے ایمرجنسی صورتحال بنتی جارہی ہے۔اُنہوں نے کہا کہ حکومتی نااہلی سے پیداشدہ اس مالی تضاد نے 3000کروڑ کی لائیبلٹی کھڑی کردی ہے۔سروڑی نے کہاکہ ایک ہزارکروڑتک ٹھیکہ داروں کے واجب الادابتائے جارہے ہیں، ایسے میں ترقی کے دعوے کھوکھلے نہیں تواورکیاہوسکتے ہیں۔ سروڑی نے کہاکہ حکومت فوری طورپر تنخواہیں، پنشن، جی پی فنڈاوردیگرواجبات کی ادائیگی ملازمین کو یقینی بنائیے۔ اُنہوں نے کہاکہ ٹھیکہ داروں اورپنشنروں کے بقایاجات اداکئے جائیں۔سروڑی نے کہاکہ مستقل ملازمین کوبھی تنخواہوں کے معاملے میں محرومیت کاسامناکرناپڑ رہاہے، جبکہ عارضی ملازمین 6ماہ سے تنخواہوں سے محروم ہیں۔مغلمیدان میں سروڑی نے 4رہبر تعلیم اساتذہ میں مستقلی کے احکامات تضویض کئے جوکہ اندروال تعلیمی زون کے تحت آتاہے۔اس ضمن میں محکمہ تعلیم کی جانب سے ایک تقریب کاانعقاد کیاگیاتھا جس میں بطورمہمان خصوصی رکن اسمبلی شریک ہوئے اور مستقلی پانے والے اساتذہ کواحکامات تھماتے ہوئے انہیں تلقین کی کہ وہ جانفشانی سے کام کریں اور وہ معمارِ قوم ہیں ، قوم کی تعمیر اور مستقبل ان کے ہاتھ میں ہے لہٰذا انتہائی دیانتداری اور سنجیدگی سے کام کیاجائے۔سروڑی نے اسکول میں طلباوطالبات کوغیرتدریسی سرگرمیوں میں بڑھ چڑھ کرشرکت کی تلقین کی ۔سروڑی نے عوامی مسائل کے انباردیکھتے ہوئے حکومت سے مانگ کی کہ وہ عوام کو بنیادی ضروریاتِ زندگی بہم پہنچانے میں سنجیدگی اختیارکرے۔اُنہوں نے کہاکہ پینے کاصاف پانی، صحت، بجلی ، تعلیم وراشن جیسی ضروریات کیلئے عوام کو مشکلات کاسامناکرناپڑ رہاہے۔مقامی لوگوں کی مانگ کوملحوظ نظررکھتے ہوئے اپنے سی ڈی ایف سے مختلف ترقیاتی کاموں کیلئے بلاک مغل میدان میں25لاکھ روپے واگذار کرنے کااعلان کیا۔اُنہوں نے یقین دلایاکہ عوامی مسائل حل کرنے میں کوئی کسرباقی نہ چھوڑی جائیگی اور تمام تردستیاب وسائل بروئے کار لائے جائیں گے۔سروڑی نے موقع پرہی حکام کو ضروری ہدایات دیں تاکہ عوامی مسائل میں کمی آسکے۔بعد ازاں سگدی ومغلمیدان سے تعلق رکھنے والے درجنوں پی ڈی پی۔ بھاجپا کارکنان نے کانگریس میں شمولیت اختیارکی۔ سروڑی نے نئے کارکنان کاپارٹی میں استقبال کرتے ہوئے کہاکہ یہ انتہائی حوصلہ افزاہے کہ اچھی خاصی تعداد سیاسی کارکنوں کی آئے روزکانگریس کاہاتھ تھام رہی ہے اُنہوں نے کہاکہ یہ خوشحال اندروال کی علامت ہے جویہاں کانگریس دن بدن مضبوط ہوتی جارہی ہے۔اُنہوں نے کہاکہ کانگریس کی مضبوطی سے ہی ریاست جموں وکشمیرخوشحالی کی جانب آگے بڑھے گی۔دورے کے دوران مختلف محکموں کے حکام ، بلاک کانگریس کمیٹی کے صدور، مقامی کانگریس لیڈران وکارکنان کے علاوہ بھاری تعدادمیں مقامی لوگ بھی شامل رہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here